وضوء

×

Error message

Deprecated function: Function create_function() is deprecated in views_php_handler_field->pre_render() (line 202 of /var/www/drupal7-websites/sites/all/modules/contrib/views_php/plugins/views/views_php_handler_field.inc).

وضوء اور طہارت افضل واشرف عمل ہے، اللہ اس کے ذریعہ گناہوں اور غلطیوں کو مٹا دیتا ہے بشرط یہ کہ بندے کی نیت اللہ سے اجروثواب کا حصول ہو، رسول اللہ ﷺ نے فرمایا: ((مومن جب وضوء کرتا ہے اور چہرہ دھوتا ہے توآخری قطرۂ پانی کے ساتھ اس کی آنکھوں کے سب گناہ ساقط ہو جاتے ہیں، اور جب ہاتھ دھوتا ہے تو آخری قطرۂ پانی کے ساتھ اس کے ہاتھوں کے گناہ جھڑجاتے ہیں، اور جب پیر دھوتا ہے تو آخری قطرہ پانی کے ساتھ گناہ ساقط ہو جاتے ہیں اور وہ گناہوں سے صاف ہوجاتا ہے))۔ (مسلم: 244)۔

وضوء کیسے کروں اور چھوٹی ناپاکی کو دورکیسے کروں؟

جب ایک مسلمان وضوء کرنے کا ارادہ کرے تو اسے اس کی نیت کرنا چاہیے یعنی دل ودماغ سے ناپاکی دور کرنے کا ارادہ کرے، جیسا کہ نبی ﷺ نے فرمایا((اعمال کا دارومدارنیتوں پرہے))۔ (بخاری:1، مسلم: 1907) پھر وضوء کی ابتداء کرے اس میں اس ترتیب کو ملحوظ رکھے جس کا نیچے تذکرہ آیا ہے، اور پے درپے کرے :۔

( بسم اللہ ) کہے

دونوں ہتھیلیوں کو تین بار دھلے بطور استحباب۔

پانی سے کلّی کرے یعنی منہ میں پانی لے کر اندر حرکت دے اور نکال دے، ایسا تین مرتبہ کرنا مستحب ہے۔

ناک میں پانی داخل کرے، یعنی ناک میں پانی لے جائے اور ناک صاف کرکے اسے نکال دے۔ یہ مستحب ہے کہ ناک میں پانی لے جانے میں مبالغہ کرے سوائے اس کے کہ وہ اس کے نقصان کا سبب بنتا ہو،اور اس طرح تین مرتبہ کرنا مستحب ہے۔

 اپنے چہرے کو دھوئے، اس طرح سے کہ سر کے بالوں سے شروع کرکے ٹھوڑی کے نچلے حصّہ تک اور ایک کان سے دوسرے کان تک (ہاتھ لے جائے)، دونوں کان چہرے میں داخل نہیں ہیں، ایسا تین مرتبہ کرنا مستحب ہے، واجب ایک ہی مرتبہ ہے۔

انگلیوں کے پوروں سے دونوں ہاتھوں کی کہنیوں تک ہاتھ دھوئے جب کہ دونوں کہنیاں اس دھونے میں داخل ہیں، ایسا تین مرتبہ دھونا مستحب ہے، البتہ واجب ایک ہی مرتبہ ہے۔

 سر کا مسح کرے اس طرح سے کہ اپنے دونوں ہاتھوں کو پانی سے بھگوئے پھر سر کے اگلے حصّے سے سر کا مسح شروع کرکے دونوں ہا تھ سر کے آخری حصّے تک لے جائے، یہ مسنون ہے کہ دونوں ہاتھوں کو دوبارہ سر کے اگلے حصّے تک واپس لوٹائے، دوسرے اعضاء میں جس طرح تین مرتبہ کرنا مستحب ہے یہاں مستحب نہیں ہے۔

دونوں کانوں کا مسح کرے اس طرح سے کہ دونوں شہادت کی انگلیوں کو دونوں کانوں میں داخل کرے اور دونوں انگوٹھوں سے دونوں کانوں کے ظاھری حصّہ کا مسح کرنا جائز ہے۔

دونوں پیر ٹخنوں تک دھوئے، تین مرتبہ دھونا مستحب ہے، البتہ واجب ایک ہی مرتبہ ہے، اور اگر وہ موزے پہنا ہوا ہوتواسے بعض شرائط کے ساتھ اس پر مسح کرنا جائز ہے۔ (دیکھئے ص 103)

آسان رہنمائے مسلم

آسان رہنمائے مسلم کی ویب سائٹ کتاب "آسان رہنمائے مسلم" کا الکٹرانک نسخہ ہے۔ یہ شرکۃ الدلیل المعاصر کا ایک پروجیکٹ ہے، جسے زائد از پندرہ زبانوں میں تیار کیا گیا ہے، اور اس کے مشمولات متعدد معیاری الکٹرانک شکلوں میں موجود ہیں۔