You are here

اسلام دین حیا ت ہے :

اسلام ایسا دین ہےجو دنیا اور آخرت کی ذندگی میں توازن برقرار رکھتاہے چناچہ دنیا ایسی کھیتی ہے جس میں مسلمان زندگی کے تمام شعبوں میں بھلائیوں کو بوتا ہے تاکہ اسے دنیا و آخرت میں اس کا بدلا ملے اور اس پودےکو ایسے نفس کی ضرورت ہے جس میں بھرپور عزم اور سنجیدگی ہو اور اس کا اظہار ذیل کی باتوں سےہو تا ہے۔

۔ زمین کو آباد کرنا:

اللہ تعا لی ٰ نے فر ما یا  ((اسی نے تمہیں زمین سے پیدا کیا ہے  او ر اسی نے  اس زمین  میں  تمہیں  بسایا  ہے  ))     :(ھو د ۔۶۱) ۔اللہ نے ہمیں اس زمین میں پید ا کیا اور اس کو آبا د کر نے اور تہذیب و تمدن سے ترقی دینے کا حکم     فر مایا جس سے انسا نیت کا فا ئد ہ ہواور اسلا می شریعت سے   متعا رض نہ ہو بلکہ اس کی تعمیر و ترقی کو مقصد و  عبا دت بتایا حالا ت کتنے ہی سنگین کیوں نہ ہویہی وجہ ہے کہ نبی ﷺ نے مسلما ن کو قیا مت کے قا ئم ہو نے کی صو رت میں بھی اگر  ممکن ہوسکے تو پودے  کو لگا نے کی طر ف توجہ دلا ئ تا کہ وہ اس کے لیے نیکی بن جا ے (  المسند ۔۲۷۱۲)

لوگوں کے سا تھ ملنا جلنا :

اسلام لوگوں کو دعو ت دیتا ہے کہ وہ تعمیر وتر قی  اور   اصلا ح معا شرہ میں حصّہ لیں اور معا شرہ کے افرادسے اعلیٰ اخلاق اور ان کے ساتھ بہتر ین  سلو ک سے  پیش آ ئیں بصر ف نظرکہ وہ مختلف تہذیب اور مذا ہب والے ہیں, اور یہ با ت ذہن میں رہے کہ لوگوں سے الگ تھلگ رہنا ارباب دعوت و اصلاح کا طریقہ نہیں ہےیہی وجہ ہے کہ رسول اللہ ﷺ نے لوگوں کے ساتھ رہنے والے ,اور ان کی تکلیف کو جھیلنے والے اور ان سے غلطی ہونے پر صبر کرنے والےکو اس شخص سے بہتر بتایا جو لوگوں سے الگ تھلگ رہتا ہے اور ان سے دوری اختیار کرتا ہے۔        ( ابن ما جہ  ۔۴۰۳۲ )۔

علم دین ۔

یہ کوئ اچنبھے والی بات نہیں تھی کہ پہلی قرآن کی بات جو نبی ﷺ پر نا زل ہوئ وہ  (" اقرٖ أ ") یعنی  "پڑ ھو " ہو ۔ چنا نچہ اسلام نے  انسانوں  کے لیے تمام نفع بخش علوم  کی بڑی تاکید فرمائ حتٰی کہ جو مسلمان علم و معرفت کی راہ میں چل پڑ تا ہے وہ اس کے جنت کا راستہ ہو تا  ہے جیسا کہ  رسو ل اللہ ﷺ نے فر ما یا :  ((علم کی تلاش  میں جو شخص  راستہ  چلتا ہے اسکے ذریعہ  اس کےجنت کا  راستہ  اللہ آسان کر دیتا ہے  )):" (ابن حبا ن ۔۸۴ )۔

اسلام دین وعلم کے درمیان کسی جنگ کو نہیں جانتا جیسا کہ دوسرے مذاہب کا معاملہ ہے اس کے بر عکس دین تو علم کا مضبوط ستون رہا ہےاور تعلّم وتعلیم کی دعوت دیتے رہا ہےجب تک اس میں   انسا نیت کےلیے خیر کا پہلو ہو۔

اسی وجہ سے اللہ نے عا لم اور معلّم کی قد ر میں اضا فہ فرما یا اور انھیں اعلیٰ درجہ سے نوازا چنانچہ نبی ﷺ نے بتایا کہ تمام مخلوقا ت معلّم کے لیے خیر کی دعا کر تے ہیں ۔ (ترمذی  ۔۲۶۸۵ )

دليل المسلم الميسر

مسلم سہولت گائیڈ سائٹ ایک معاصر گائیڈ کمپنی منصوبوں 15 سے زائد زبانوں کی پیداوار اور مخصوص الیکٹرانک ٹیمپلیٹس میں سے ایک بڑی تعداد میں مواد فراہم کیا گیا ہے جو اس کتاب (مسلم سہولت گائیڈ) کی الیکٹرانک ورژن ہے.

الدليل المعاصر