You are here

نوافل نماز پڑھنے کے ممنوعہ اوقات

مسلمان کسی بھی وقت نفلی نماز پڑھ سکتا ہے بجزء ان ممنوعہ اوقات کے جن میں شریعت نے نماز پڑھنے سے منع کیا ہے کیونکہ وہ کافروں کی عبادت کا وقت ہے البتہ فرائض کی قضاء یا سبب والی نفلی نمازیں جیسے تحیۃ المسجد، اور یہ منع صرف نمازکی حد تک ہے، مگر اللہ کا ذکر اور دعا کسی بھی وقت کی جا سکتی ہے۔

ممنوعہ اوقات حسب ذیل ہیں:

  1. نماز فجر کے بعد سے لیکر طلوع آفتاب تک جب وہ آسمان میں تھوڑی سی بلندی پر شریعت کے مقررکردہ ایک نیزہ کی مقدار کے برابر آجائے، معتدل ممالک میں یہ بلندی شروق کے تقریباً (20) منٹ بعد ہوتی ہے۔
  2. جب سورج بیچ آسمان میں آجائے یہاں تک کہ زوال ہوجائے جو ظہر کا وقت داخل ہونے سے کچھ دیر پہلے ہوتا ہے۔
  3. نماز عصر کے بعد سے لے کر غروب آفتاب تک۔

اسلام نے عصر کے بعد سورج غروب ہونے تک صلاۃ کو ادا کرنے سے منع کیا ہے۔

آسان رہنمائے مسلم

آسان رہنمائے مسلم کی ویب سائٹ کتاب "آسان رہنمائے مسلم" کا الکٹرانک نسخہ ہے۔ یہ شرکۃ الدلیل المعاصر کا ایک پروجیکٹ ہے، جسے زائد از پندرہ زبانوں میں تیار کیا گیا ہے، اور اس کے مشمولات متعدد معیاری الکٹرانک شکلوں میں موجود ہیں۔